میانی معمولی تلخ کلامی پر دودھ فروش کو اغوا کر کے تشدد برہنہ کر کے ویڈیو بناتے رہے.

میانی معمولی تلخ کلامی پر دودھ فروش کو اغوا کر کے تشدد برہنہ کر کے ویڈیو بناتے رہے.
بھیرہ کے نواحی گاؤں رکھ نوالہ کے رہائشی دودھ فروش محمد قدیر دودھ بیچنے کے لیے میانی آ رہا تھا جب وہ پکھوال کے نزدیک پھچا تو شیر محمد سکنہ مونہ سیدا، فرحان، غلام حیدر، اللہ دتہ، احمد حسن، محمد عادل، محمد طاق اور چار کس نامعلوم افراد نے اسلحہ کے زور پر اغوا کر لیا اور اغوا کر کے پکھوال کے جنگل میں لے گے اور وہاں برہنہ کر کے تشدد کرتے رہے اور موبائل پر فلم بناتے رہے اور اس سے 8000 روپے اور 18000 کا موبائل بھی چھین لیا اور کہا کے اگر کسی کو بتایا یا تھانے اطلاع دی تو جان سے مار دیں گے اور اس کو برہنہ حالت میں چھوڑ کر فرار ہوگئے میانی پولیس نے مدعی محمد قدیر کی درخواست پر مقدمہ درج کر کے تفتیش شروع کردی

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*

Powered by Dragonballsuper Youtube Download animeshow