لاہور ڈاکووں کے نرغے میں 43 روز میں 141 ڈکیتی کی وارداتیں

لاہور :کورونا کے پیش نظر شہر بھرمیں لاک ڈاون کا 43واں روز کے دوران شہر میں اسٹریٹ کرائم اور قتل کی وارداتیں بڑھنے لگیں،
ڈکیتی اور رابری کی 141 وارداتیں ۔قتل اور ڈکیتی مزاحمت پر 20 افراد قتل اور درجنوں زخمی ہو گئے،تفصیلات کے مطابق صوبائی دارالحکومت میں لاک ڈاؤن کے دوران جرائم پیشہ عناصر نے شہر میں دہشت پھیلائی .جگہ جگہ پولیس ناکے بھی شہریوں کی جان و مال کو محفوظ نہ بنا سکے، پولیس ریکارڈ کے مطابق شہر میں قتل اور ڈکیتی مزاحمت پر 20 افراد قتل ہوئے اور درجنوں زخمی ہو ئے سبزہ زار میں ڈکیتی مزاحمت کے دوران مسلح ڈاکووں نے ظہیر نامی شخص اور فیصل ٹاؤن میں اے ٹی ایم سے رقم نکلوا کر نکلنے والے خالد نامی شخص کو ڈاکووں نے واردات کے دوران فائرنگ کر کے قتل جبکہ لوئر مال میں دو افراد ڈکیتی مزاحمت سمیع اللہ اور مشتاق کو زخمی کر دیا علاؤہ ازیں لاہور ہوٹل کے قریب دیرینہ دشمنی پر 1۔شخص ۔شادباغ کے علاقے ایسٹرن بائی پاس کے قریب خاتون کی بوری بند تشدد زدہ لاش ملی اور 2افرد فائرنگ سے قتل کیے ہوسکی ریکارڈ کے مطابق ڈکیتی و راہزنی کی 141 سے زائد وارداتیں ہوئیں.کاراورموٹر سائیکل چوری کی 341 وارداتیں رونما ہوئیں. جبکہ دو مبینہ پولیس مقابلوں میں دو ڈاکو کاہنہ ایک ریکارڈ یافتہ قاتل باغبانپورہ میں مارا گیاموٹر سائیکل چھیننے کی 20 وارداتیں ریکارڈ ہوئیں،

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*

Powered by Dragonballsuper Youtube Download animeshow