سرگودہا میں بینک ،ڈاکخانہ اور نادرا دفتر کے باہر شہریوں کا رش کورونا ایس او پیز پر عمل درآمد صفر

سرگودھا میں بنک برانچز ،ڈاکخانہ جات اور نادرا دفاتر کھولنے پر لوگوں کے زبردست رش نے کورونا وائرس ایس او پیز کھلے عام خلاف ورزی کر کے انتظامیہ اور پولیس تمام اداروں کی کارکردگی کا پول کھل دیا جبکہ شہر بھر میں لوگوں کے ہجوم ،آمدورفت اور آدھے شٹر کھول کر کاروبار نے ثابت کر دیا کہ انتظامیہ لاک ڈاون،دفعہ 144 اور انسداد کورونا آرڈیننس پر عمل درآمد کروانے میں ناکام ہو چکی ہے۔زرائع کے مطابق سرگودھا میں بنک برانچوں کے تین روز بعد،ڈاکخانہ جات تعطیل کے بعد اور نادرا دفاتر کئی روز بعد کھولنے پر مردوخواتین، بوڑھوں، بچوں کا زبردست رش دیکھنے میں آیا جہاں لمبی لمبی قطاروں کے علاوہ اندر کاونٹرز پر بھی ہجوم کا سماں رہا جبکہ شہر بھر میں شہریوں کا رش ،آمدورفت، بازاروں میں خریداروں کا ہجوم اور آدھے شٹر کھول کر کاروبار ،موٹرسائیکل ڈبل سواری کا سلسلہ جوں کا توں جاری ہے اور اکا دھکا پکڑ دھکڑ کے باوجود کورونا ایس او پیز،دفعہ 144 ،انسداد کورونا آرڈیننس کی خلاف ورزی نے ثابت کر دیا ہے کہ سیکورٹی اداروں اور انتظامیہ قوانین پر عمل درآمد کروانے میں ناکام ہو چکے ہیں۔اس طرح جگہ جگہ ایس او پیز کی دھجیاں اڑائی جا رہی ہیں اور سماجی فاصلے کو نظر انداز کرتے ہوئے لوگ ایک دوسرے سے جڑ کر کھڑے نظر آتے ہیں۔تمام بنکوں کی جانب سے کسی قسم کے حفاظتی اقدامات نہیں کئے گئےجس کی وجہ سے بنکوں کے باہر لوگوں کا بے پناہ رش کرونا وائرس کو تقویت دینے کا موجب بن رہا ہے ۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*

Powered by Dragonballsuper Youtube Download animeshow