گندم خریداری کا ٹارگٹ حاصل نہ کرنے پر کمشنر نے چاروں اضلاع کے اے ڈی سی جیز کی سر زنش

سرگودہا : کمشنر ڈاکٹر فرح مسعود نے گندم خریداری مہم میں اب تک کا مقرر کردہ ٹارگٹ حاصل نہ کرنے پر چاروں اضلاع کے اے ڈی سی آر کی سرزنش کرتے ہوئے انہیں اہداف کے حصول کیلئے ایک ہفتہ کی ڈیڈلائن دی ہے ۔ انہوں نے بتایا کہ ناقص کارکردگی پر بھکر اور سرگودہا کے ڈی ایف سی کو معطل کر دیاگیا ہے او رٹارگٹ کو حاصل کرنے کیلئے مزید سخت اقدامات بھی اٹھائے جائیںگے ۔ کمشنر نے کوٹہ کے تحت 25من سے زیادہ گندم ذخیرہ کرنے والے کاشتکاروں کی تمام گندم کو اٹھا کر خریداری مراکز پہنچانے کی ہدایت کی ہے ۔ یو این این کے مطابق انہوں نے چاروں اضلاع کے ڈپٹی کمشنروں کو روزانہ کی بنیاد پر شام کو خریداری رپورٹ مرتب کرنے او رانہیں بھجوانے کی ہدایت کی ہے ۔ وہ ڈویژن بھر میں گندم خریداری مہم کے جائزہ اجلا س سے خطاب کر رہی تھیں۔ اجلاس میں ایڈیشنل کمشنر شہباز حسین نقوی ‘ ڈپٹی کمشنرز عبداللہ نیئر شیخ ‘ مسرت جبین ‘ عمر شیر چٹھہ ‘ چاروں اضلاع کے ڈی ڈی سی آر ز ‘ ڈپٹی ڈائریکٹر خوراک ارشد وٹو او رڈائریکٹر زراعت فیض محمد کندی نے شرکت کی ۔ کمشنر نے گندم کے ذخیرہ اندوزوں او ربین الاضلاع وبین الصوبائی نقل وحمل کی سختی سے حوصلہ شکنی کرنے کی ہدایت کی ۔ انہوں نے محکمہ خوراک کی کارکردگی پر بھی عدم اطمینان کا اظہار کرتے ہوئے واضح ہدایات جاری کیں ۔ یو این این کے مطابق انہوں نے مارکیٹ میں گندم کی قیمت پر خاص نظر رکھنے کی ہدایت کرتے ہوئے زیادہ قیمت پر خریدنے والے عناصر کے خلاف ضابطہ کے تحت کارروائی کرنے کی بھی ہدایت کی ۔ کمشنر نے کہاکہ موجودہ موسمی حالات سے مشکلات تو ہیں لیکن کسی افسرکی کارکردگی کاپتہ ایسے حالات میں ہی لگتا ہے ۔ انہوں نے افسران کو ہدایت کی کہ چاروں اضلاع میں جس جگہ بھی گندم کاایک دانہ بھی کاشت ہوا وہاں پہنچنے او رگندم خرید کر مراکز پر لائیں ۔ انہوں نے گندم خریداری مہم میںنمبرداروں او رپٹواریوں کو ذمہ داریاں سونپیں ۔اے سی کو ٹارگٹ دے کر روزانہ کی بنیاد پر رپورٹ کرنے کی بھی ہدایت کی ۔ انہوں نے کہاکہ اہداف کے حصول تک وہ روزانہ کی بنیاد پر خود بھی اجلاس منعقد کر کے کارکردگی کاجائزہ لیں گی ۔ یو این این کے مطابق اجلاس کو ڈائریکٹر زراعت فیض محمد کندی نے بتایاکہ ڈویژن کے چاروں اضلاع میں امسال ساڑھے پانچ لاکھ ایکڑ رقبہ پر گندم کاشت ہوئی اور 30من فی ایکڑ پیداوار متوقع ہے۔اجلاس کو مزید بتایاگیاکہ چاروں اضلاع میں امسال تین لاکھ 27ہزار808میٹرک ٹن گندم کی خرید کاہدف مقر ر کیاگیا ۔ اب تک کاشتکاروں کو 19لاکھ 97ہزار 29بوری باردانہ فراہم کیاجاچکاہے جبکہ 56ہزار23میٹرک ٹن گندم خریدی ہے ۔ میانوالی نے سب سے زیادہ باردانہ جاری کیا ہے جبکہ خریداری میں سرگودہا کا پہلا نمبر ہے ۔ چاروں اضلاع کے ڈپٹی کمشنروں نے اس عزم کا اعادہ کیاکہ مقرر کردہ ٹارگٹ کو مقررہ مدت کے اندر ہی حاصل کر لیا جائیگا ۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*

Powered by Dragonballsuper Youtube Download animeshow