وزیراعلی پنجاب کی صوبائی ارکان اسمبلی سے ملاقات

صوبائی وزراء اور اراکین اسمبلی کو کورونا کی روک تھام کیلئے مزید موثر کردار ادا کرنے کی ہدایت

وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار سے آج وزیراعلیٰ آفس میں صوبائی وزراء اور اراکین اسمبلی نے ملاقات کی۔ ملاقات کرنے والوں میں صوبائی وزراء سید صمصام بخاری، ملک اسد کھوکھر، نعمان لنگڑیال، سردار آصف نکئی، سردار محمد سبطین خان، رکن پنجاب اسمبلی غضنفر عباس اور سابق رکن اسمبلی رائے حسن نواز شامل تھے۔ یو این این کے مطابق وزیراعلیٰ عثمان بزدارنے صوبائی وزراء اور اراکین اسمبلی کو کورونا کی روک تھام کیلئے اقدامات کے حوالے سے مزید موثر کردار ادا کرنے کی ہدایت کرتے ہوئے کہا کہ کورونا کی وجہ سے وطن عزیز کو غیرمعمولی حالات کا سامنا ہے لہٰذا یہ آپ کی قومی ذمہ داری ہے کہ اپنی تمام ترکوششیں موجودہ غیرمعمولی صورتحال سے نمٹنے کیلئے بروئے کار لائیں۔انہوں نے کہا کہ حکومت نے کورونا وائرس کی روک تھام کیلئے موثر اقدامات کئے ہیں۔ پنجاب حکومت اب تک تقریباً ایک لاکھ 7 ہزارسے زائد ٹیسٹ کر چکی ہے۔ پنجاب میں 8 بی ایس ایل تھری لیبز کو فنکشنل کر دیا گیا ہے۔ ان لیبز پر 62کروڑ روپے کی لاگت آئی ہے۔ یو این این کے مطابق وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے کہا کہ پنجاب حکومت کی روزانہ ٹیسٹنگ کی صلاحیت 6 ہزار سے بڑھ گئی ہے۔ گزشتہ 24 گھنٹے کے دوران تقریباً 5030 ٹیسٹ کئے گئے ہیں۔ ٹیسٹنگ کی صلاحیت کو بتدریج 10 ہزار روزانہ تک بڑھا دیا جائے گا۔ کورونا سے نمٹنے کیلئے وسائل کی کوئی کمی نہیں۔ انہوں نے کہا کہ پنجاب میں کورونا کے 3086 مریض صحت یاب ہو چکے ہیں۔ 6اضلاع میں سمارٹ سییمپلنگ کا آغاز کر دیا گیا ہے۔ لاہور، راولپنڈی، ملتان، گوجرانوالہ، گجرات اور فیصل آباد میں سمارٹ سیمپلنگ کے تحت مختلف کیٹیگریز کے ٹیسٹ کئے جا رہے ہیں۔انہوں نے کہا کہ حکومت کو موجودہ حالات میں بے روزگار ہونے والوں کی پریشانیوں کا ادراک ہے۔ احساس کفالت پروگرام کے تحت ضرورت مند شہریوں کو 12 ہزار روپے کی رقم انتہائی شفاف طریقے سے دی جا رہی ہے جبکہ چیف منسٹر رمضان پیکج کے تحت مستحق افراد کو 3 ہزار روپے مالی امداد دی جائے گی۔10 لاکھ خاندان چیف منسٹر رمضان پیکج سے مستفید ہوں گے۔ یو این این کے مطابق انہوں نے کہا کہ ڈینگی سے نمٹنے اور گندم خریداری مہم میں بھی فعال انداز میں فرائض سرانجام دیئے جائیں۔ گندم خریداری مہم ہدف کے حصول تک جاری رہے گی۔ منتخب نمائندے اپنے علاقوں میں گندم خریداری مہم کی نگرانی کریں اور کاشتکاروں کے مسائل حل کریں۔ انہوں نے کہا کہ ذخیرہ اندوزی اور گراں فروشی کرنے والوں کی جگہ جیل ہے۔ذخیرہ اندوزوں اور ناجائز منافع خوروں کے خلاف کارروائی جاری رہے گی۔عوامی نمائندے ذخیرہ اندوزوں اورگراں فروشوں کے خلاف کارروائی کی مانیٹرنگ کا فریضہ سرانجام دیں۔انہوں نے کہا کہ ڈاکٹرزاورپیرامیڈیکل سٹاف کی خدمات کو فراموش نہیں کر سکتے۔ دکھی انسانیت کی خدمت میں پیش پیش مسیحاؤں کو خراج تحسین پیش کرتے ہیں۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*

Powered by Dragonballsuper Youtube Download animeshow