گندم کی نقل و حمل روکنے کیلئے بین الاضلاعی بارڈروں پر کڑی نگرانی رکھی جائے کمشنر فرح مسعود

کمشنر سرگودہا ڈاکٹر فرح مسعود نے کہا ہے کہ گندم خریداری مہم میں کچھوے کی چال کو برداشت نہیں کیا جائیگا۔ ریونیو ،خوراک اور زراعت کے افسران کی کارکردگی اہداف کو مقررہ مدت کے اندر حاصل کرنے سے مشروط ہے ناکامی کی صورت میں ایکشن لیا جائے گا۔10ایکڑ کے تمام کاشتکاروں کی فصل کا ریکارڈ مرتب کیا جائے،پٹواری نمبردار اور چوکیدار ہر کاشتکار کے ڈیرہ پر پہنچیں اور ان کے گوداموں کا جائزہ لیں ،ضرورت سے زیادہ گندم کو فوری اٹھا کر خریداری مراکز پر پہنچایا جائے۔بین الصوبائی اور بین الاضلاعی بارڈرپر مانیٹرنگ کو سخت کیا جائے ۔ فلور ملز اور نجی گوداموں کی روزانہ کی بنیاد پر انسپکشن کی جائے۔تمام زمہ داران کھیت تک پہنچیںاور گندم کی کٹائی ،تھریشنگ اور خریداری مراکز لانے تک مانیٹرنگ رکھی جائے۔یہ بات انہوں نے چاروں اضلاع میں گندم خریداری مہم کے روزانہ کی بنیاد پر منعقدہ جائزہ اجلاس میں دیں۔اجلاس میں ایڈیشنل کمشنر شہباز حسین نقوی چاروں اضلاع کے ڈپٹی کمشنرز ،عبداللہ نیر شیخ ، مسرت جبیں ،سید موسی رضا،اے ڈی سی آرز ،ڈائریکٹر زراعت فیض احمد کندی اور ڈپٹی ڈائریکٹر خوراک ارشد وٹو نے شرکت کی۔ کمشنر نے کہا کہ بعض خریداری مراکز پر کرپشن کی شکایات موصول ہورہی ہیںجس پر سخت ایکشن لیا جائیگا اور ذمہ داروں کے ساتھ کوئی رعایت نہیں برتی جائے گی۔انہوںنے آڑھتیوں کی سرگرمیوں پر خاص نظر رکھنے اور مارکیٹ میںگندم کی مقررکردہ قیمت کو برقرار رکھنے کیلئے ہر ممکن اقدامات اٹھانے کی ہدایت کی۔ یو این این کے مطابق اجلاس کو بتایا گیا کہ چاروں اضلاع میں امسال مقررہ کردہ 3لاکھ 27ہزار 808میٹرک ٹن ہدف کے مقابلے میں کاشتکاروں کو اب تک دو لاکھ 17ہزار 359باردانہ تقسیم کیا جا چکا ہے جو کل ہدف کا 66فیصد سے زائد ہے اور اب تک 75ہزار 377میٹرک ٹن گندم خرید کر23فیصد ہدف حاصل کر لیا گیا ۔ کمشنر نے تمام ایسے کاشتکار جنہیں باردانہ لئے ہفتہ سے زیادہ عرصہ گزر چکا ہے اور وہ اپنی فصل خریداری مراکز پر نہیں لائے ان کا پتہ چلانے کی بھی ہدایت کی۔ یو این کے مطابق اجلا س میں چاروں اضلاع میں ٹڈی دل کی صورتحال اور جاری کرپشن کا بھی تفصیلی جائزہ لیا گیا۔ کمشنر نے تمام ایس جگہیںجہاں ٹڈی دل موجود ہے وہاں دن رات آپریشن کرنے اور سرولنس کو مزید تیز کرنے کی ہدایت کی۔ اجلاس میں کمشنر نے ڈاکٹر فرح مسعود نے پرائس کنٹرول مجسٹریٹس کی کارکردگی پر بھی عدم اطمینان کا اظہار کرتے ہوئے ڈپٹی کمشنرز کو مجسٹریٹس کی کارکردگی پر خاص فوکس کرنے کی ہدایت کی۔ انہوں نے کہا کہ مارکیٹوں میں اشیائے خوردو نوش کی قیمتوں پر خاص نظر رکھی جائے ۔زخیز ہ اندوزوں اور ناجائز منافع خوروں کے خلاف بے رحم آپریشن کیا جائے ۔انہوںنے دالوں ،چینی ،گھی سمیت دیگر ضروری اشیاءکی طلب و رسد اور مقرر کردہ قیمتوں پر فروخت کو یقینی بنانے کی ہدایت کی۔ انہوںنے رمضان المبارک میں سبزیوں اور فروٹ کی وافر مقدار پر دستیابی کیلئے تمام ممکنہ اقدامات اٹھانے اور پرائس کنٹرول مجسٹریٹس کو روزانہ کی بنیاد پر بازاروں مارکیٹوں کے علاوہ دور افتادہ علاقوں کے دورے کر کے مفصل رپورٹ مرتب کر کے متعلقہ فورم کو بھجوانے کے احکامات بھی جاری کئے۔
Unn

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*

Powered by Dragonballsuper Youtube Download animeshow