عوام احتیاط کرے وگرنہ حکومت سخت پالیسی اختیار کرنے پر مجبور ہوجائے گی زاہد غوری

سرگودھا (بیورو رپورٹ) عوام نے احتیاط نہ کی تو حکومت سخت پالیسی بنانے پر مجبور ہوگی جو کرفیو کی صورت میں قوم کے سامنے آسکتی ہے عید کے دنوں میں کی جانیوالی بداحتیاطی کے نتائج اب کرونا مریضوں کی صورت میں سامنے آرہے ہیں اگر یہی صورتحال برقرار رہی تو کرونا بے قابو ہوجائیگا جس کا خمیازہ پوری قوم کو بھگتنا ہوگا ان خیالات کا اظہار سیاسی سماجی شخصیت ڈاکٹر زاہد اقبال غوری نے کیا انہوں نے کہا کہ کرونا کو سیرئس نہ لینے والے خود اس کا شکار ہورہے ہیں بدقسمتی سے جو یہ لوگ کہہ رہے ہیں کہ ڈاکٹرز پیسے کمانے کیلئے لوگوں کو کرونا میں ڈال رہے ہیں اگر ایسا ہوتا تو ڈاکٹرز اور پیرا میڈیکس کے لوگ اپنی جانوں کے نذرانے پیش نہ کرتے ڈاکٹر زاہد اقبال غوری نے کہا کہ عوام اب بھی احتیاط کریں تو موجودہ کیس کنٹرول کئے جاسکتے ہیں اللہ کے فضل سے پاکستان میں صحت یاب مریضوں کی تعداد 26 ہزار سے تجاوز کرچکی ہے مگر اس کے ساتھ متاثرین کی تعداد بھی 70 ہزار سے زائد ہوچکی ہے اس میں تھوڑی سی احتیاط اپنی اور اپنے پیاروں کی جانوں کو بچانے کیلئے ضروری ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*

Powered by Dragonballsuper Youtube Download animeshow