سرگودہا پریس کلب میں کورنا کی روک تھام کیلئے میڈیا ورکشاپ کا انعقاد

سرگودھا( )کورونا وائرس کی وباء میں تیزی سے اضافہ آئندہ ماہ جولائی اور اگست میں حد کو چھو سکتا ہے اس لئے اس کے پھیلاو کو روکنے کے لئے کورونا وائرس سے بچاو کی احتیاطی تدابیر اور ایس او پیز کے بارے آگاہی مہم کو فروغ دینا ہے جس میں صحافی اپنا بھر پور کردار ادا کر سکتے ہیں۔ان خیالات کا اظہار سرگودھا پریس کلب میں منعقدہ تربیتی ورکشاپ سے پی ایم اے پنجاب کے نائب صدر ڈاکٹر سکندر حیات وڑائچ، ڈسٹرکٹ ہیلتھ آفیسر ڈاکٹر سہیل اصغر قاضی، ایم ایس ڈی ایچ کیو ڈاکٹر غلام شبیر، صدر پریس کلب عبدالحنان چوہدری،گروپ لیڈر شاہین فاروقی جنرل سیکرٹری رانا ساجد اقبال اور دیگر نے کیا مقررین نے بتایا کہ مریض کے کھانسنے،چھینکنے اور ہاتھ ملانے سے کورونا وائرس پھیلاو کا موجب بن سکتا ہے جس سے بچاو کے لئے احتیاطی تدابیر اپنانا نہیں بلکہ ہر پاکستانی کو اس سے بچانے کے لئے اپنا کردار ادا کرنا ہو گا اگر اب  بھی اس کو پوری قوم نے سنجیدہ نہ لیا تو وہ وقت دور نہیں جب ہر گلی کوچے میں یہ مرض جنم لے گا۔تربیتی ورکشاپ میں بتایا گیاکہ سماجی فاصلہ،ماسک کا استعمال، ہاتھ ملانے سے گریز ،اور بار بار ہاتھ دھونے سے اس بیماری کو شکست دی جا سکتی ہے جس کی آگاہی ہر شہری تک پہنچاناضروری ہے اس لئے اس کام میں صحافی بڑھ چڑھ کر حصہ لیں اگر سرگودھا کے صحافی اپنی کاوشوں سے سرگودھا میڈیکل کالج کا قیام کروا سکتے ہیں تو پھر کوئی مشکل نہیں کہ ہم ہر شہری تک اپنا پیغام پہنچا کر اینٹی کورونا وائرس تحریک کو کامیاب نہ بنا سکیں۔ڈاکٹر سکندر حیات وڑائچ نے کہا کہ کورونا وائرس کی وباء ہو یا معاشرتی مسائل ڈاکٹر اور صحافی فرنٹ لائن پر اپنا کردار ادا کرتے ہیں۔اس لئے موجودہ کورونا وائرس کی اس خوفناک گھڑی میں جہاں ڈاکٹر اور پیرا میڈیکل سٹاف جدوجہد کررہی ہے وہاں ہمارے صحافی بھی لوگوں کو آگاہی دینےمیں کسی سے کم نہیں۔مقررین نے کہا کورونا وائرس کے خلاف بھر پور آگاہی مہم کی وقت کی اہم ضرورت ہے۔اس مشکل گھڑی میں متاثرین کی معاونت بھی وقت کا تقاضا ہے اس لئے ہمیں انسانی جانوں کے بچاو کے ساتھ ساتھ انہیں بھوک و افلاس سے بچاو پر بھی توجہ دینا ہو گی۔مقررین نے کہا کہ جب ہم خود احتیاطی تدابیر کو اختیار کر کے ایس او پیز پر عمل کریں گے تو خود بخود ہی مہم کامیاب ہوجائے گی۔  ہم سب مل کر اس خوفناکی وباء کو شکست دینے میں اپنا کردار ادا کر سکیں گے انہوں نے کہا کہ گھر ہو یا محفل، بازار میں ہو یا روڈ ہر جگہ ایس او پیز کو یقینی بنانا اور اس کی آگہی ہمارا فرض اولین ہونا چاہئے۔اس موقع پر ڈسٹرکٹ ہیلتھ آفیسر ڈاکٹر سہیل اصغر قاضی نے بتایا کہ لاک ڈاون میں نرمی کے ساتھ ہی یومیہ مریضوں کی تعداد میں اضافہ سے شرح اموات بڑھنے لگی ہیں۔ان کا کہنا تھا کہ سرگودھا میں کورونا کے 706 کنفرم مریضوں میں تبلیغی اور زائرین کو نکال کرمقامی کی تعداد 226 ریکارڈ کی گئی ہے۔اس لئے اس بیماری کی روک تھام وقت کی اہم ضرورت ہے جس میں ہم سب کو مل کر اپنا کردار ادا کرنا ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*

Powered by Dragonballsuper Youtube Download animeshow