پنجاب ہیلتھ کئیر کمیشن نے صادق ہسپتال سرگودہا کے عملے کو نااہل اور ان ٹرینڈ قرار دے دیا

پنجاب ہیلتھ کئیر کمیشن نے صادق ہسپتال سرگودھا کے خلاف دائر کردہ مقدمہ محمد وحید بنام صادق ہسپتال میں حتمی فیصلہ فیصلہ سناتے ہوئے ہسپتال کے ان ٹرینڈ اور نا اہل سٹاف کو درخواست گزار کی والدہ کی موت کا ذمہ دار قرار دے دیا۔ تفصیلات کے مطابق 2018 میں درخواست گزار محد وحید نے اشرف رحیمی ایڈووکیٹ کی وساطت سے ایم ڈی صادق ہسپتال ڈاکٹر لیاقت اور ڈپٹی مئیر بلال خان کے خلاف مقدمہ دائر کیا تھا کہ ہسپتال کے غلط انجکشن لگانے کی وجہ سے درخواست گزار کی والدہ انتقال کر گئی تھی۔ دو سال کی طویل سماعت کے بعد اب فیصلہ آیا ہے۔ مقدمہ کی سماعت کے دوران ہسپتال کے متعدد ڈاکٹرز سٹاف نرسز کو جرح کے لئے طلب کیا گیا۔ غیر جانبدار ایکسپرٹس کی جانب سے پیش کردہ آراء بھی فیصلہ کا حصہ ہیں۔
غفلت کے تعین کے لئے ہسپتال کو ایک لاکھ جرمانہ بھی عائد کیا گیا ہے جو دو ہفتہ کے اندر درخواست گزار کو ادا کرنا ہے۔ علاوہ ازیں فیصلہ میں صادق ہسپتال سرگودھا کو طبعی سہولیات Minimum Service Delivery کی کم ازکم فراہمی کے معیار پر بھی تحفظات ظاہر کئے گئے ہیں۔
یہ امر قابل ذکر ہے کہ ہسپتال انتظامیہ نے اپنے تحریری بیان میں سرگودھا کے بعض صحافیوں پر بھی اس واقعہ میں ہسپتال کو بلیک میل کرنے اور رقم طلب کرنے کا الزام لگایا ہے جس کا ذکر کمیشن نے فیصلہ میں بھی کیا ہے۔
درخواست گزار کے وکیل اشرف رحیمی کا ماننا ہے کہ کمیشن کا فیصلہ پوسٹ مارٹم کا درجہ رکھتا ہے جس کی بناء پر ہسپتال انتظامیہ کے خلاف قتل عمد کا مقدمہ / استغاثہ admissible ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*

Powered by Dragonballsuper Youtube Download animeshow